فوری رابط: ۱۹۵۱-۲۵۵۳۶۶۹۱
Mainbanner

13جولائی 1931کےشہداے کشمیر کو آغا حسن کا خراج

منشیات کی طرف نوجوانوں کے میلان میں مخدوش حالات کا عمل دخل 13جولائی 1931کے شہداے کشمیر کو انکی برسی پر شاندار خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے انجمن شرعی شیعیان کے صدر آغا سید حسن الموسوی الصفوی نے کہا کہ ریاست پر کہی دہایوں سے مسلط شخصی آمریت کے خاتمے کے لئے ان شہدا کی قربانیاں… View Article

منشیات کی طرف نوجوانوں کے میلان میں مخدوش حالات کا عمل دخل

13جولائی 1931کے شہداے کشمیر کو انکی برسی پر شاندار خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے انجمن شرعی شیعیان کے صدر آغا سید حسن الموسوی الصفوی نے کہا کہ ریاست پر کہی دہایوں سے مسلط شخصی آمریت کے خاتمے کے لئے ان شہدا کی قربانیاں ایک سنگمیل کی حثیت رکھتی ہیں انھوں نے کہ کہ کشمیری قوم ان شہدا کی ہمیشہ مرحون منت رہے گی جنکی قربانیوں میں اس قوم کو ڈوگرہ شاہی کے انسانیت سوز مظالم سے نجات دلائی انھوں نے کہا کہ 13جولائی1931کے دن سنٹرل جیل کے باہر ڈوگرہ سپائیوں کے ہاتھوں دو درجن سے زیادہ نہتے کشمیریوں کے قتل عام کا سانحہ ڈوگرہ شاہی کے خلاف ایک منظم تحریک کا پیش خیمہ ثابت ہوا اور بالآخر ڈوگرہ آمریت کو عوام کے سامنے سر نگون ہونا پڑا آغا حسن نے کہا کہ کشمیری پنڈت اس قوم کے جز لا ینفک ہے کشمیری قوم برسوں سے انکی گھر واپسے کے منتظر اور متمنی ہیں انھوں نے کہا کہ کشمیری پنڈتوں کی گھر واپسی کا ہر سطح پر خیر مقدم کیا جائے گا تاہم انکے لئے کسی الگ ہوم لینڈ کا تصور بھی کشمیریت کی عزت اور شان کے منافی ہے اس موقعہ پر آغا حسن نے وادی میں منشیات کی بڑھتی وبا پر سخت تشویش ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ اس صورت حال کا سب سے بڑا محرک نا مساعد حالات ہے نامساعد حالات کی وجہ سے نوجوان طبقہ ذہنی انتشار میں مبتلا ہو چکا ہے اور وہ منشیات کی طرف راغب ہو رہے ہے انھوں نے کہا کہ جو بھی ادارہ سرکاری یا غیر سرکاری وادی میں منشیات کے خلاف مہم چھیڑے گا اس کا تہہ دل سے خیر مقدم کیا جائے گا دریں اثنا تنظیم کے اہتمام سے وادی میں منعقد ہونے والے جمعہ اجتماعات پر بھی ائمہ جمعہ نے وادی میں منشیات کی بڑھتی ہوئی وبا کے اثباب پر تفصیلی روشنی ڈالی اور عوام سے اپیل کی کہ وہ اس لعنت کے خاتمے کے لئے اپنی ذمہ داریاں ادا کریں۔ائمہ جمعہ نے والدین سے اپیل کی کہ وہ اپنے بچوں پر کڑی نظر رکھیں جن مقامات پر ائمہ جمعہ نے عوام کو منشیات کے منفی اثرات اور اس وبا سے نمٹنے کے تدابیر سے روشناس کیا ان میں قدیمی امام بارہ حسن آباد،امام بارگاہ یاگی پورہ ماگام،جامعہ مسجد سونہ پاہ بیرو،جامعہ مسجد آبی گزر سرینگر،آستان میر اراکیؒ چاڈورہ، امام باڑہ گامدو گاڑکھوڑ وغیرہ شامل ہے۔